Jala Diya Shajar-E-Jaan Ke Sabz-Bakht Na Tha

Jala Diya Shajar-E-Jaan Ke Sabz-Bakht Na Tha

Parveen Shakir Gazal

Jala Diya Shajar-E-Jaan Ke Sabz-Bakht Na Tha
Kesi Bhe Rut Mein Hara Ho Ye Wo Darakht Na Tha
Wo Khwab Dekha Tha Shahzadiyon Ne Pichhle Pahar
Pher Us Ke Baad Muqaddar Mein Taj O Takht Na Tha
Zara Se Jabr Se Main Bhe To Tut Sakti The
Mere Tarah Se Tabiat Ka Wo Bhe Sakht Na Tha
Mere LeyeTo Wo Khanjar Bhe Phul Ban Ke Utha
Zaban Sakht The Lahja Kabhe Karakht Na Tha
Andhere Raaton Ke Tanha Musafiron Ke Leye
Diya Jalata Hua Koe Saz-O-Rakht Na Tha
Gae Wo Din Ke Mujhe Tak Tha Mera Dukh Mahdud
Khabar Ke Jaisa Ye Afsana Lakht-Lakht Na Tha

Visit : Pk Earn Online

Visit :pksonglyricspk

Tool : Get YouTube Video Thumbnail Image


جلا دیا شجر جاں کہ سبز بخت نہ تھا


جلا دیا شجر جاں کہ سبز بخت نہ تھا
کسی بھی رت میں ہرا ہو یہ وہ درخت نہ تھا
وہ خواب دیکھا تھا شہزادیوں نے پچھلے پہر
پھر اس کے بعد مقدر میں تاج و تخت نہ تھا
ذرا سے جبر سے میں بھی تو ٹوٹ سکتی تھی
مری طرح سے طبیعت کا وہ بھی سخت نہ تھا
مرے لیے تو وہ خنجر بھی پھول بن کے اٹھا
زبان سخت تھی لہجہ کبھی کرخت نہ تھا
اندھیری راتوں کے تنہا مسافروں کے لیے
دیا جلاتا ہوا کوئی ساز و رخت نہ تھا
گئے وہ دن کہ مجھی تک تھا میرا دکھ محدود
خبر کے جیسا یہ افسانہ لخت لخت نہ تھا